حافظ ابو بکر ولد سعید الرحمان کی ختم قرآن مجید کی نورانی مجلس منعقد

نئی دہلی،24مئی(نامہ نگار):پرانی دہلی کے چاندنی محل میں واقع امرود والی مسجد میں حافظ ابوبکر ولدسعید الرحمان کی ختم قرآن شریف کی تقریب معروف سماجی خدمتگار سید ارسلان رضا کی صدارت میں منعقد کی گئی۔اس موقع پربُزرگ عالم دین مفتی آفتاب حسین نے اپنے مختصر خطاب میں حافظ ابوبکرکو مبارکباد پیش کی اور کہاکہ یقینا حفاظ کرام مبارکباد کے مستحق ہیں،کیو نکہ کل قیامت میں حافظ کے والدین کوایسا تاج پہنایا جائیگا جسکی روشنی سورج کے مانند ہوگی۔اسی لئے ہمیں چاہئے کہ اپنی اولادکو حفظ قرآن شریف بنائیں۔مفتی آفتاب نے رمضان المبارک کے اس مقدس ماہ میں انجام دی جا نے والی خصوصی عبادتوں، نیک اعمال نیز مخصوص تا کیدوں کی جانب متوجہ کر تے ہوئے روزہ داروں کی ذمہ داری پرتفصیلی روشنی ڈالتے ہوئے قرآن مجید کی تعلیمات کے حوالے سے گفتگو کی۔صوفی ارسلان رضا نے اپنی گفتگو میں صلوٰہ التراویح کی افادیت اور اہمیت کے تعلق سے کہاکہ رمضان کے مبارک مہینہ میں قرآن کریم کا نزول ہو ا ہے اسلئے اس ماہ عظیم میں قرآن سننا اور پڑھنا بیحد ثواب ہے، ساتھ ہی ضروری ہے کہ مسلمان کلام اللہ معنوں کے ساتھ پڑھیں تاکہ قرآن مجید میں دئے گئے رب العالمین کے احکاماتسے واقف ہوں۔تقریب کااختتام مولانا آفتاب حسین کی دعا،تقسیم تبرک ولنگرشریف پرہوا۔اس موقع پر پسماندہ فرنٹ دہلی کے کنوینر فخر الدین انصاری،سوشل ورکر محمد یونس،حافظ غفران نقشبندی،بھائی زاہد حسین سمیت دیگر بڑی تعداد میں موجودتھے۔

 Website with 5 GB Storage

اپنا تبصرہ بھیجیں