درگاہ شاہ مینا میں پانچ پارے تراویح کا پہلا دور مکمل ہوا۔ رمضان المبارک میں تراویح پیارے نبیﷺ کی پیارے سنت ہے۔

گذشتہ شب ۵/رمضان المبارک درگاہ حضرت مخدوم شاہ مینا شاہ رحمتہ اللہ علیہکی جامع مسجد میں پانچ پارے تراویح میں قرآن مجید کا پہلا دور حافظ محمد متین و حافظ محمد گلفام متعلم دارالعلوم حضرت مخدوم شاہ مینا نے مکمل کرایا۔ درگاہ حضرت مخدوم شاہ مینا کے سجادہ نشین و متولی پیرزادہ شیخ راشد علی مینائی نے ختم قرآن ک موقع پر قرآن مجید کی اہمیت و فضیلت پر روشنی ڈاتے ہوئے کہا کہ قرآن مجید کا پڑھنا پڑھانا تمام چیزوں سے افضل ہے۔ اللہ نے الفت و محبت کی علامت یہ ہے کہ ہم اس کے کلام پاک کی محبت قلب و جگر میں بسا لیں۔ اس کی تعلیم پر عمل کرنے دنیا اور آخرت میں کامیابی درکار ہوگی لیکن آج ہمارا حال یہ ہے کہ قرآن مجید کی محبت دل سے نکل کر دنیا کی محبت نے جگہ لے لی ہے۔ بڑے افسوس کی بات یہ ہے کہ دیگر علوم کو حاصل کرانے کے لئے ایڑی چوٹی کا زور لگا دیتے ہیں اور اس پر بے دیرغ روپئے بہانے میں کوئی قصر نہیں چھوڑتے مگر قرآن کی تعلیم کی جب بات آتی تو اس سے مکر جاتے ہیں۔ درگاہ شاہ مینا کے سجادہ نشین و متولی نے تراویح میں قرآن مجید مکمل کرانے والے دونوں حفاظ کرام کے گلے میں اور مزار شریف دونوں حفاظ کرام کو تمام مینائی سلسلہ کے اور مصلیان نے بھی قرآن مجید مکمل کرانے پر عزت افزائی کی۔ تراویح میں ہزاروں کی تعداد میں لوگ مجود تھے۔ جس میں خاص طور سے قاری محمد شریف حافظ زید شاہد، قاری محمد، اسلام قاری، کلو بھائی، جمیل احمد، شبیر احمد بشیری، شمشیر علی، مدثر عالم، حاجی محمد شفیق مینائی سلسلہ کے پیرزادہ رئیس علی مینائی، زاہد علی مینائی، ریحان علی مینائی، مظہر علی مینائی، شہنشاہ علی مینائی، ثروت علی مینائی وغیرہ شامل ہوئے۔ تراویح کا دوسرا دور یومیہ۲ پارے حافظ محمد زید شاہد سنائیں گے۔

 Website with 5 GB Storage

اپنا تبصرہ بھیجیں