مکروہات نماز

Views: 29
Avantgardia

مولانا علی احمد قاسمی

سوال: مکروہات نماز کتنے ہیں؟
جواب: مکروہات نماز تیس ہیں:
(۱) کسی واجد یا سنت کو قصدا ترک کرنا۔
(۲) گردن موڑ کر دیکھنا۔
(۳) کتے کی طرح بیٹھنا۔
(۴) دونوں آستینوں کو چڑھانا۔
(۵) کرتہ کے موجود ہوتے ہوئے صرف لنگی یا پاجامہ سے نماز پڑھنا۔
(۶) سلام کا جواب اشارہ سے دینا۔
(۷) بلا عذر چار زانو بیٹھنا۔
(۸) مرد کو بالوں کا چوٹا باندھ کر نماز پڑھنا۔
(۹) سر پر رومال ایسی طرح باندھنا کہ سر کا بیچ کھلا رہے۔
(۱۰) کپڑے کو ادھر ادھر سے اٹھانا یا ادھر ادھر لٹکانا۔
(۱۱) داہنی بغل کے نیچے نکال کر بائیں مونڈھے پر چادر ڈالنا۔
(۱۲) قرأت کو قیام میں پورا نہ کرنا رکوع میں جاتے ہوئے پورا کرنا۔
(۱۳) نفل کی پہلی رکعت کو طویل کرنا۔
(۱۴) دوسری رکعت میں سورت کو مکرر پرڑھنا۔
(۱۵) فرض کی ایک رکعت میں سورت کو مکرر پڑھنا۔
(۱۶) چھوٹی دو سورتوں کے درمیان ایک سورت چھوڑ کر پڑھنا۔
(۱۷) خوشبو قصدا سونگھنا۔
(۱۸) اپنے کپڑے یا پنھے سے ایک دو مرتبہ ہوا کرنا۔
(۱۹) ہاتھیوں اور پیروں کی انگلیوں کو سجدہ وغیرہ میں قبلہ سے پھیرنا۔
(۲۰) رکوع میں دونوں ہاتھ گھٹنوں پر نہ رکھنا۔
(۲۱) جمائی لینا۔
(۲۲) دونوں آنکھوں کو بند کرنا۔
(۲۳) آسمان کی طرف دیکھنا۔
(۲۴) انگرائی لینا۔
(۲۵) عمل قلیل یعنی تھوڑا سا کام کرنا۔
(۲۶) جوں کو پکڑنا اور مارنا مگر جب پریشان کرے تو مکروہ نہیں ۔
(۲۷) ناک اور منھ کو ڈھانکنا۔
(۲۸) منھ میں کوئی ایسی چیز رکھنا جو قرأ ت مسنون سے مانع ہو۔
(۲۹) سجدہ عمامہ کے بیچ پر یا تصویرپر کرنا۔
(۳۰) بلا عذر صرف پیشانی پر سجدہ کرنا۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *

0

Your Cart