اہم خبریں

جمعیت اور درگاہ خواجہ غریب نوازؒسے قدیم رشتہ

درگاہ اجمیر شریف سے جمعیۃ علماء ہند کا تاریخی رشتہ ہے
درگاہ خواجہ غریب نوازؒ کے ایک وفد نے جمعیۃ علماء ہند کے صدر دفتر کا دورہ کیا

نئی دہلی 14؍ نومبر: درگاہ شریف حضرت خواجہ معین الدین چشتی اجمیری ؒ کے ایک وفد نے آج مرکزی دفتر جمعیۃ علماء ہند نئی دہلی پہنچ کر صدر جمعیۃ علماء ہند مولانا محمود اسعد مدنی سے ملاقات کی۔ وفد میں جناب سید عبدالواحد چشتی انگارہ شاہ،سید مصبر حسین چشتی خادم درگاہ خواجہ صاحب اور حاجی اسرار احمد خاں چیئرمین پٹھان فائونڈیشن شامل تھے ۔اس موقع پرصدر جمعیۃ علماء ہند مولانا مدنی، ناظم عمومی مولانا حکیم الدین قاسمی اور مولانا نیاز احمد فاروقی و دیگر نے پھول کے گلدستہ سے ان کا استقبال کیا ۔
مولانا مدنی نے اپنی گفتگو میں درگاہ کے تاریخی و مذہبی کردار پر روشنی ڈالتے کہا کہ یہ ایک حقیقت ہے کہ ہندستان میں حضرات صوفیاء کرام بالخصوص حضرت خواجہ غریب نواز ؒ نے اصلاح وتربیت کے جتنے بلند اخلاقی دائرے بنائے ہیں اور اپنی انسانیت دوستی ، نیک نفسی کے ذریعہ ہندستانی سماج میں جتنے اعلیٰ نقوش چھوڑے ہیں ، وہاں تک فلسفہ ونظر کی رسائی نہ ہوسکی ۔کردار وعمل کی یہی صداقت ہے جس کی عظمتوں کے سامنے دل ونگاہ بھی جھک جاتے ہیں ۔آج اسی کردار کو مزید تقویت دینے کی ضرورت ہے ، نیز مسلمانوں کے سبھی طبقات کے درمیان اتحاد و ہم آہنگی کے لیے اجمیر شریف سب سے بڑے مرکز ی کردار کا حامل ادارہ ہے ۔
مولانا مدنی نے کہا کہ جمعیۃ کے بیشتر اکابر کا روحانی سلسلہ حضرت خواجہ صاحب سے منسلک ہے ۔حضرت خواجہ رحمہ اللہ کا قول ہے کہ طریقت اور تصوف خدا کی محبت اور اس کے بندوں کی خدمت کے دو عناصر سے وجود میں آتا ہے اوراسی کا نام ولایت ہے ۔ طریقت اور ولایت کے اسی تصور کو جمعیۃ علماء ہند کے اکابرنے اپنی کردار سے روشن اور قائم کیا ۔مولانا مدنی سے ملاقات کے بعد وفد نے جمعیۃ علماء ہند کی لائبریری کا بھی دورہ کیا اور جمعیۃ پر پرزینٹیشن کے ذریعہ معلومات حاصل کی ۔ سید عبدالواحد چشتی انگارہ نے اپنی گفتگو میں کہا کہ جمعیۃ علماء ہند کا درگاہ اجمیر شریف سے تاریخی رشتہ رہا ہے ۔ آزادی وطن کے بعد اس کی بازیابی میں جمعیۃ نے جو کردار ادا کیا ہے، وہ تاریخ میں زریں حروف سے نقش ہے ۔انھوں نے عرس کے موقع پر جمعیۃ کی طبی خدمات کی بھی ستائش کی ۔
اراکین وفد نے دیگر خدام جمعیت علمائے ہند سے بھی ملاقات کی جس میں مولانا عظیم اللہ صاحب صدیقی قاسمی میڈیا انچارج ،پروفیسر عبد الماجد صاحب اور مولانا محمد یاسین جہازی صاحب کے نام شامل ہیں.

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
%d bloggers like this: