غزل

دیا وفا کا جلاؤ بڑا اندھیرا ہے

    *خوب صورت غزل*
    *ازقلم🖊 افتخار حسین احسن*
    *رابطہ📲6202288565*

    دیا وفا کا جلاؤ بڑا اندھیرا ہے.
    تمام شکوے بھلاو بڑا اندھیرا ہے.

    بغیر تیری مری زندگی ادھوری ہے.
    وفا کا جام پلاؤ بڑا اندھیرا ہے.

    مجھے یقین ہے چمکے گی میری بھی قسمت.
    ذرا نقاب اٹھاو بڑا اندھیرا ہے.

    گھٹائیں چھائ ہیں غم کی ہمارے چہرے پر.
    مجھے گلے سے لگاو بڑا اندھیرا ہے.

    بڑی حسین ہے وادی تری محبت کی.
    وفا کا گیت سناو بڑا اندھیرا ہے.

    ہماری آبرو نیلام ہو نہ جاے کہیں.
    بچو مجھے بھی بچاو بڑا اندھیرا ہے.

    تمہاری یاد میں آنسو سدا بہاتا ہوں.
    ذرا سا جلوہ دکھاو بڑا اندھیرا ہے.

    وفا کی راہ میں احسن بھٹک بھی سکتا ہے.
    اسے قریب بلاو بڑا اندھیرا ہے.

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

یہ بھی پڑھیں
Close
Back to top button
Close
%d bloggers like this: