اسلامیات

رمضان میں زیادہ سے زیادہ قرآن پڑھنے اور سننے کا معمول بنائیں

افادات : عارف باللہ حضرت مولانا محمد عرفان صاحب مظاہری دامت برکاتہم گڈا جھارکھنڈ
سلسلہ نمبر( 6)

قرآن پاک اللہ تبارک تعالیٰ کی طرف سے انسانوں کو عطا کردہ ایک قیمتی تحفہ ہے، اس کتاب میں صرف آخرت میں کامیابی سے متعلق ہدایات نہیں بلکہ اس دنیا میں بھی کامیاب ہونے کے اصول و ضابطے بتاءے گئے ہیں. دنیا کا کوئی بھی انسان قرآن میں بیان کردہ ہدایات پر عمل کرے گا تو اس میں کوئی شک نہیں کہ اس کی زندگی کامیاب، پر سکون اور خوشحالی سے ہم کنار ہوگی.

یہ قرآن عربی زبان میں ہے، لیکن اس کی خصوصیت یہ ہے کہ جو عربی نہ جانتے ہوں وہ بھی تلاوت کریں تو ان کے لئے ثواب میں کوئی کمی نہیں ہوگی. اور ثواب بھی کوئی معمولی نہیں بلکہ ایک ایک حرف پر دس دس نیکیاں ملتی ہیں. حضور پاک صلی اللہ علیہ و سلم نے فرمایا *من قرا حرفا من کتاب اللہ فلہ بہ حسنۃ، والحسنۃ بعشرۃ امثالھا ،لا اقول الم حرف، بل الف حرف ولام حرف و میم حرف.( ترمذی) ،* جس نے قرآن مجید کا ایک حرف پڑھا تو اس کے لیے ایک نیکی ہے اور یہ ایک نیکی دس نیکیوں کے برابر ہے، میں یہ نہیں کہتا کہ الم ایک حرف ہے بلکہ الف ایک حرف، لام ایک حرف اور میم ایک حرف ہے.

یہ ثواب تو اس صورت میں بھی ہے جبکہ بلا وضو کے کوئی قرآن پڑھے، لیکن اگر کوئی وضو کے ساتھ پڑھتا ہے تو ایک حرف پر پچیس نیکیاں ملیں گی، اور اگر کوئی نماز میں کھڑے ہو کر پڑھتا ہے تو اس کو ایک حرف پر سو نیکیاں ملیں گی اور اگر بیٹھ کر پڑھتا ہے تو اس کو پچاس نیکیاں ملیں گی. پھر اگر یہ نماز جماعت والی ہو تو اس کا ثواب ستائیس گنا بڑھ جاتا ہے. *صلوۃ الجماعۃ تفضل صلوۃ الفذ بسبع و عشرین درجۃ (روہ البخاری)* آپ ص نے فرمایا کہ جماعت والی نماز کا ثواب تنہا نماز سے ستائیس گنا زیادہ ہے. پھر گھر میں نماز پڑھنے اور مسجد میں نماز ادا کرنے کے اعتبار سے بھی ثواب میں فرق ہو جاتا ہے. محلہ والی مسجد میں پچیس گنا زیادہ ثواب ملتا ہے اور جامع مسجد میں پانچ سو گنا زیادہ ثواب ملتا ہے، اسی طرح مسجد اقصی میں پچیس ہزار، مسجد نبوی میں پچاس ہزار اور مسجد حرام میں ایک لاکھ نمازوں کا ثواب ملتا ہے *صلوٰۃ الرجل فی بیتہ بصلوۃ و صلوتہ فی مسجد القبائل بخمس و عشرین صلوۃ، وصلوتہ فی المسجد الذی یجمع فیہ بخمس مئات صلوۃ الخ (ابن ماجہ)* پھر اخلاص کے اعتبار سے ثواب میں کمی اور زیادتی ہوتی ہے. اور سب سے اہم بات یہ ہے کہ یہ رمضان المبارک کا مہینہ ہے. اس میں ہر عمل کا ثواب بڑھا دیا جاتا ہے لہذا یہ اہتمام رمضان کے دنوں میں ہو تو اس کا ثواب کتنا بڑھ جاءے گا اس کا تصور نہیں کر سکتے. اس طرح اگر ثوابوں کا حساب کرکے دیکھا جاءے تو اس ماہ مبارک میں ایک حرف پر دس نیکیوں سے لے کر ستر ہزار بلکہ ستر لاکھ سے زائد نیکیاں مل سکتی ہیں. یہ تو صرف ایک حرف کی بات ہے. ایک آیت اور ایک سورہ کے ثوابوں کا شمار کیا جاءے تو کتنا ہو جاءے گا ہم اندازہ بھی نہیں لگا سکتے.

اور چونکہ قرآن پاک رمضان المبارک میں نازل ہوا اللہ تعالیٰ نے فرمایا *شھر رمضان الذی انزل فیہ القرآن (البقرہ)* اس لیے اس مہینے سے قرآن کو خصوصی تعلق ہے، یہی وجہ ہے کہ سرکار دو عالم صلی اللہ علیہ و سلم ہر رمضان المبارک میں حضرت جبریل علیہ السلام کے ساتھ قرآن پاک کا دور کرتے تھے، اس لئے ایک مومن بندے کو چاہیے کہ وہ ثواب حاصل کرنے کی غرض سے اور سنت سمجھ کر بھی رمضان میں کم از کم ایک قرآن مکمل کرے.

یہاں پر واضح رہے کہ قرآن پاک کے ایک ایک حرف پر جو ثواب کا وعدہ ہے وہ صرف قرآن پڑھنے والوں کے ساتھ خاص نہیں بلکہ جو قرآن پاک کو سنے اس کو بھی یہی اجر و ثواب ملے گا. ایک حدیث میں آپ ص نے فرمایا. *من استمع الی آیۃ من کتاب اللہ کانت لہ حسنۃ مضاعفۃ، و من تلاھا کانت لہ نورا یوم القیامۃ (رواہ احمد)* جس نے کتاب اللہ کی ایک آیت سنی اس کو کئی گنا نیکیاں ملیں گی اور جس نے اس کو پڑھا اس کے لئے یہ آیت قیامت کے روز نور ہوگی.

لہذا ہمیں چاہیے کہ اس مبارک مہینے میں زیادہ سے زیادہ قرآن پاک کی تلاوت کریں، تراویح اور نفل میں قرآن پڑھنے یا سننے کی کوشش کریں، اگر خود سے تلاوت نہ کر سکتے ہوں تو کسی تلاوت کرنے والے سے قرآن کو سنیں، اس سے ثواب بھی ملے گا اور دل کو تازگی، فرحت اور سکون بھی حاصل ہوگا. حتی کہ اگر کوئی قرآن پڑھنے والا نہ ملے تو موبائل کے آڈیو سے بھی قرآن سن سکتے ہیں، اس طرح سننے پر بھی اجر و ثواب ملے گا لیکن اس میں شرط یہ ہے کہ قرآن کی تلاوت آن کرنے کے بعد ہمہ تن متوجہ رہیں ایسا نہ ہو کہ موبائل سے تلاوت آن کر کے آپ دوسرے کاموں میں مشغول ہو جائیں، یہ قرآن کی بے ادبی ہوگی. اللہ تعالیٰ ہمیں اس ماہ مبارک میں قرآن کی تلاوت زیادہ سے زیادہ کرنے کی توفیق عطا فرمائے آمین

Tags

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
%d bloggers like this: